202 total views, 1 views today

وکی پیڈیا کے مطابق پاکستان کی فلمی صنعت کے موسیقار نثار بزمی 1 دسمبر 1924ء کو ممبئی کے نزدیک خاندیش کے قصبے میں مولوی گھرانے کے سید قدرت علی کے گھر پیدا ہوئے۔
اصل نام سید نثار احمد تھا۔ والد سید قدرت علی کا تعلق موسیقی سے نہ تھا۔ بچپن میں نثار بزمی مشہور بھارتی موسیقار امان علی خان سے متاثر تھے ۔ ان ہی کی رفاقت کی وجہ سے 13 سال کی عمر میں بہت سے راگوں پر عبور حاصل کر چکے تھے۔
1968ء میں فلم ’’صاعقہ‘‘ کی موسیقی پر اور 1970ء میں فلم ’’انجمن‘‘ کے میوزک پر نثار بزمی نے نگار ایوارڈ حاصل کیا، لیکن یہ محض ابتدا تھی۔ 1972ء میں ’’میری زندگی ہے نغمہ‘‘، 1979ء میں ’’خاک اور خون‘‘ اور صدارتی تمغا برائے حسنِ کارکردگی سے بھی نواز ا گیا ۔
22 مارچ 2007ء کو 8 3سال کی عمر میں کراچی میں انتقال کرگئے ۔




تبصرہ کیجئے