185 total views, 4 views today

وکی پیڈیا کے مطابق پاکستان کے نامور فلمی لوک و فلمی گلوکار، کمپیئر، اداکار اور سیاست دان عنایت حسین بھٹی 31 مئی1999ء کو ضلع گجرات میں انتقال کر گئے۔
آپ 12 جنوری 1928ء کو ضلع گجرات، برطانوی ہندوستان (موجودہ پاکستان) میں پیدا ہوئے۔ آپ کی فلمی زندگی کا آغاز بطورِ گلوکار ہوا تھا۔ فلم ہیر، پھیرے ، لارے اور شمی وغیرہ میں آپ کے گائے ہوئے نغمات بے حد مقبول ہوئے تھے۔ 1953ء میں فلم شہری بابو میں ایک فقیر منش سائیں کا کردار ادا کیا جس پر انہی کا گایا ہوا نغمہ ’’بھاگاں والیو نام جپو مولا نام فلم بند ہوا‘‘ اور پھر یہی نغمہ ان کی شناخت بن گیا۔ 1955ء میں شباب کیرانوی نے اپنی فلم جلن میں انہیں مرکزی کردار ادا کرنے کی پیشکش کی۔ اس کے بعد انہوں نے ایک طویل عرصہ تک فلموں میں مرکزی کردار ادا کیا۔ ان کی بطورِ اداکار فلموں کی کل تعداد 54 تھی جس میں 52 پنجابی زبان میں بنائی گئی تھیں۔ عنایت حسین بھٹی کی آخری فلم عشق روگ 1989ء میں نمائش پذیر ہوئی۔
عنایت حسین بھٹی نے 1985ء کے عام انتخابات میں قومی اسمبلی کی ایک نشست پر انتخاب لڑا تھا، مگر کامیاب نہ ہو سکے تھے۔ پاکستان کے مشہور فلمی اداکار کیفی آپ کے بھائی، ٹیلی وژن کے مشہور فن کار وسیم عباس صاحبزادے اور ٹیلی وژن ہی کے ایک اور اداکار آغا سکندر آپ کے داماد تھے۔




تبصرہ کیجئے