150 total views, 2 views today

لوہانی پٹھانوں کے چار بڑے قبائل میں سے ایک، جس نے غالباً 17ویں صدی کی ابتدا میں مروتوں اور میاں خیل کو ٹانک سے نکال باہر کیا۔ ان کا مرکزی قبیلچہ کتّی خیل تھا۔ دولت خیل نے اپنے حکمران قتال خان کی سرکردگی میں ٹانک پر حکومت کی اور 18ویں صدی کے وسط میں ان کی طاقت بہت زیادہ تھی۔ وہ درانیوں کی ہمراہ انڈیا میں آئے اور بہت سی دولت لوٹ کر واپس گئے، لیکن پھر بھٹانی اور دیگر قبائل نے تجاوز کیا اور اب ان کی تعداد کم اور طاقت گھٹ گئی ہے۔ ضلع ڈیرہ اسماعیل خان کا مرکزی جاگیردار، نواب آف ٹانک کھتّی خیل تھا۔ (ذاتوں کا انسائیکلو پیڈیا از ای ڈی میکلیگن/ ایچ اے روز، مترجم یاسر جواد، شائع شدہ بُک ہوم لاہور، صفحہ نمبر 16-215 سے انتخاب)




تبصرہ کیجئے