33 total views, 2 views today

ڈاکٹر فیصل ظفر گردوں کے حوالہ سے اپنے ایک تحقیقی مقالہ میں درجن بھر ایسے نِکات کا ذکر کرتے ہیں، جو گردوں کی بیماری کا باعث بنتے ہیں۔ ایسا ہی ایک نکتہ کچھ یوں ہے: ’’جب کچرا خون میں جمع ہونے لگتا ہے، تو کھانے کا ذائقہ بدلا ہوا محسوس ہوتا ہے اور منھ میں دھات یا میٹالک ذائقہ رہ جاتا ہے۔ اسی طرح سانس میں بُو پیدا ہونا بھی دورانِ خون میں بہت زیادہ زہریلا مواد جمع ہونے کی علامت ہے۔ مزید برآں ایسا ہونے پر گوشت کھانے یا کھانے کی ہی خواہش کم یا ختم ہوجاتی ہے، جس کے نتیجے میں جسمانی وزن میں غیر متوقع کمی آتی ہے۔ ویسے منھ کا ذائقہ بدلنے کی متعدد وجوہات ہوسکتی ہیں اور عام علاج سے مسئلہ دور ہوجاتا ہے، تاہم اگر یہ علاج کے باوجود برقرار رہے،تو اپنے ڈاکٹر سے رجوع کرنا چاہیے۔‘‘




تبصرہ کیجئے