511 total views, 2 views today

ڈان اردو سروس کی حالیہ ایک تحقیق میں ہارٹ اٹیک کی سامنے آنے والی علامات پر مفصل روشنی ڈالی گئی ہے جس میں سب سے بڑی علامت یوں بیان کی گئی ہے کہ “بائیں ہاتھ میں درد ایسی علامت ہے جس میں اکثر دماغ تعین نہیں کر پاتا کہ درد کہاں سے آ رہا ہے؟ اس کی وجہ یہ ہے کہ اعصاب اوپری بازو، سینے سے ایک ہی جگہ جڑے ہوتے ہیں، تو دماغ سمجھ نہیں پاتا کہ دل میں درد ہے، وہ اسے ہاتھ میں سمجھ لیتا ہے، جیسے آپ انگلی میں چٹکی لیں، تو آپ کو تکلیف وہاں ہی محسوس ہوگی، سینے میں اس کا اثر نہیں ہوگا۔” اس لیے جب بھی بائیں ہاتھ میں درد محسوس ہو، تو فوراً ڈاکٹر سے رجوع کیا کریں۔




تبصرہ کیجئے